ایم کیو ایم کے رہنما سلیم شہزاد وطن واپسی پر گرفتار

پاکستانی سیاسی جماعت ایم کیو ایم کے رہنما سلیم شہزاد کو 24 برس تک خود ساختہ جلاوطنی اختیار کیے رکھنے کے بعد پیر کے روز وطن واپس پہنچنے پر حراست میں لے لیا گیا ہے۔سلیم شہزاد ایم کیو ایم لندن کے بانی رہنماؤں میں سے ایک تھے اور سن 1992ء سے برطانیہ میں مقیم تھے۔ وطن واپسی سے قبل انہوں نے اپنے ایک ٹوئٹر

مقامی میڈیا کے مطابق سلیم شہزاد دبئی سے کراچی پہنچنے والی ایک پرواز کے ذریعے وطن لوٹے۔ سلیم شہزاد کی گرفتاری کے وارنٹ سن 2016ء میں دسویں مرتبہ انسداد دہشت گردی کی ایک مقامی عدالت کی جانب سے جاری کیے گئے تھے۔ اس مقدمے میں سلیم شہزاد کو مشتبہ دہشت گردوں کی معاونت کے الزام کا سامنا ہے۔

پاکستانی نشریاتی ادارے ڈان نیوز کے مطابق سلیم شہزاد کے وطن واپس پہنچنے پر وفاقی تحقیقاتی ادارے ایف آئی اے نے پولیس سے رابطہ کیا۔ سلیم شہزاد پر ڈاکٹر عاصم کیس میں بھی ملوث ہونے کا الزام ہے۔ مقامی میڈیاکے مطابق ایس ایس پی ملیر راؤ انور نے تصدیق کی ہے کہ سلیم شہزاد پولیس کی حراست میں ہیں۔

پیغام میں اپنی واپسی کی اطلاع دی تھی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں