قحط کے متاثرین کوامداد کی اشد ضرورت ہے، اقوام متحدہ

خشک سالی اور مسلح تنازعات سے سالانہ بنیاد پر قحط کے متاثرین میں بیس فیصد اضافہ ہو رہا ہے،سیکرٹری جنرل
نیویارک:اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انٹونیو گوٹیرش نے کہا ہے کہ دنیا بھر میں قحط کے متاثرین کے لیے عطیات دی گئی ہیں لیکن اب بھی بھاری امداد درکار ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق انہوں نے کہا کہ مختلف ملکوں کو درپیش قحط کی صورت حال سے بیس ملین افراد کی زندگیوں کو سنگین خطرات لاحق ہیں۔ قحط سے متاثرہ علاقے جنوبی سوڈان، صومالیہ، یمن اور شمال مشرقی نائجیریا میں واقع ہیں۔

مزید پڑھیں :شرکی تمام قوتوں کےخلاف دنیا متحد ہوجائے،سعودی عرب

سیکرٹری جنرل کے مطابق رواں برس فروری میں جاری اپیل سے حاصل ہونے والے عطیات سے فی الحال قحط سے متاثرین کی ابتدائی امداد جاری ہے۔ گوٹیرش کے مطابق خشک سالی اور مسلح تنازعات سے سالانہ بنیاد پر قحط کے متاثرین میں بیس فیصد اضافہ ہو رہا ہے۔ جنوبی سوڈان میں ایسے افراد کی تعداد چھ ملین سے زائد ہے۔

Summary
Review Date
Reviewed Item
قحط کے متاثرین کوامداد کی اشد ضرورت ہے، اقوام متحدہ
Author Rating
51star1star1star1star1star

اپنا تبصرہ بھیجیں