فاروق ستار سے سینیٹ ٹکٹ دینے کا اختیارواپس لے لیا گیا

کراچی: رابطہ کمیٹی نے ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ فاروق ستار سے سینیٹ کا ٹکٹ دینے کا اختیار واپس لے لیا ہے ۔
ذرائع کا کہنا ہے کہ ایم کیوایم رابطہ کمیٹی نے فاروق ستار سے سینیٹ کا ٹکٹ جاری کرنے کا اختیار واپس لے لیا، ذرائع کا کہنا ہے کہ رابطہ کمیٹی نے الیکشن کمیشن کو خط لکھا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ فاروق ستار کے پاس سینیٹ کا ٹکٹ دینے کا اختیار نہیں، ایم کیو ایم پاکستان کے آئین کے مطابق ٹکٹ دینے کا اختیار صرف رابطہ کمیٹی کو ہے ۔دوسری جانب پی آئی بی کالونی میں رہائش گاہ کے باہر میڈیا سے بات کرتے ہوئے فاروق ستار کا کہنا تھا آج شام 5 بجے اپنی رہائش گاہ پر پارلیمینٹیرینز کا اجلاس طلب کیا ہے جس کے بعد بہادرآباد میں قائم ایم کیو ایم کے عارضی مرکز جاؤں گا جہاں آج شام 7 بجے بحیثیت سربراہ ایم کیو ایم رابطہ کمیٹی کا اجلاس طلب کیا ہے ۔

مزید پڑھیں :ایگزیکٹ کیس ملکی وقار کا معاملہ ہے:چیف جسٹس پاکستان

گزشتہ روز بھی فاروق ستار کو منانے کے لیے رابطہ کمیٹی کے وفد نے فاروق ستار سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی کوشش کی لیکن وہ نہ مل سکے جس کے بعد فیصل سبزواری نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت فوری نوعیت کے فیصلے درکار ہیں، پوری رابطہ کمیٹی فاروق ستار کے گھر گئی تھی اور ان کا ایک گھنٹہ 10 منٹ تک انتظار کیا لیکن ملاقات نہ ہوسکی۔واضح رہے کہ کامران ٹیسوری کو سینیٹر بنانے کے معاملے پر ایم کیو ایم پاکستان 2 دھڑوں میں تقسیم ہوگئی ہے جب کہ رابطہ کمیٹی کی جانب سے کامران ٹیسوری کی رکنیت معطل کرنے کے بعد معاملہ مزید شدت اختیار کرگیا ہے ۔

Summary
Review Date
Reviewed Item
فاروق ستار سے سینیٹ ٹکٹ دینے کا اختیارواپس لے لیا گیا
Author Rating
51star1star1star1star1star

اپنا تبصرہ بھیجیں