ویلنٹائن ڈے ایک شرط کےساتھ حرام نہیں:تیونسی مفتی اعظم

تیونس کے مفتی اعظم عثمان بطیّخ کا کہنا ہے کہ “ویلنٹائن ڈے ” حرام نہیں اور اس کو منانا جائز ہے بشرط یہ کہ “اخلاقی حدود کو پار نہ کیا جائے “۔
منگل کے روز ایک اخباری بیان میں انہوں نے کہا کہ ’’سخت گیر مبلغین کا اس کو نصاری کی تقلید قرار دینا درست نہیں ہے ۔ اس لیے کہ ویلنٹائن ڈے کا براہ راست ان کے مذہب سے کوئی تعلق نہیں۔ جو چیز بھی لوگوں کو قریب لائے اور ان کو اکٹھا کرے وہ ایک ایک اچھا امر ہے ‘‘۔مفتی اعظم کے مطابق محبّت اسلامی اقدار میں داخل ہے ۔ اللہ کی محبت اسلام ہے اور اللہ سے محبت یہ ہے کہ آپ تمام انسانوں سے محبت کریں

مزید پڑھیں :سعودی حکومت بیلجیم کی سب سےبڑی جامع مسجد سےدستبردار

اس سے دلوں میں موجود بغض اور کدورت کا خاتمہ ہو گا۔واضح رہے کہ تیونس کے مفتی اعظم عثمان بطّیخ اندرونی اور بیرونی سطح پر اپنے متنازع مواقف کی وجہ سے جانے جاتے ہیں۔ اس سے قبل وہ ’’میراث میں مرد اور عورت کے مساوی حصّوں‘‘کے حوالے سے تیونس کے صدر الباجی قائد السبسی کے منصوبے کی تائید کر چکے ہیں۔ اس موقف کے سبب ’’تیونسی دیوانِ افتاء‘‘اور مصر کے ادارے ’’الازہر‘‘میں بڑے مباحثے دیکھنے میں آئے تھے ۔

Summary
Review Date
Reviewed Item
ویلنٹائن ڈے ایک شرط کےساتھ حرام نہیں:تیونسی مفتی اعظم
Author Rating
51star1star1star1star1star

اپنا تبصرہ بھیجیں